Posts

Featured Post

Wake-up Pakistan ! جاگو پاکستان

Image
Presently the Muslim societies including Pakistan, are in a state of ideological confusion and flux. Materialism, extremism, ignorance and intolerance have threatened the peace, tarnishing the image of religion. آج کے دور میں مسلم معاشرہ نظریاتی  ابتری اور انحطاط کا شکار ہے. مادہ پرستی، دہشت گردی، عدم برداشت، اور جہالت انسانیت، امن اور مذھب کے لیے خطرہ بن چکے ہیں. Lack of education in modern knowledge has kept them behind and underdeveloped among community of nations. The despotic rulers, oppress the population to keep their grip on power and resources. The teaching of Islam to establish a just and morally superior society are ignored with emphasis on rituals only. These circumstances demand special response from the people who are deeply concerned about well being of humanity. Objective of this Wake-up Call is to draw the attention towards pressing issues which need urgent resolution. With persistent efforts we can get out of of this quagmire. ....  Keep reading

CAPITALISM’S ACHILLES HEEL: Dirty Money and How to Renew the Free-Market System RAYMOND W. BAKER ; Page 76-85 on Pakistan: Bhuttos & Sharif's [اردو ترجمہ کے ساتھ with Urdu Translation]

Image
ہمارے بڑے سیاست دانوں کی اصلیت کو کتاب " سرمایہ دارانہ نظام کا کمزور پہلو”  (“Capitalism’s Achilles Heel” ) بے نقاب کرتی ہے یہ ایک ناقابل تسخیر چیلنجنگ کتاب ہے ، جو کارپوریٹ ایگزیکٹو ، معاشی ماہر ، مفکر ، سیاست دان ، اور انسانی حقوق کے کارکن کے لئے بھی لکھی گئی ہے۔  مصنف ریمنڈ ڈبلیو بیکر (پیدائش: 30 اکتوبر ، 1935) ایک امریکی تاجر ، اسکالر ، مصنف ، اور "مالیاتی جرم پراتھارٹی " ہے۔ وہ واشنگٹن ، ڈی سی میں تحقیقاتی اور وکالت کرنے والی تنظیم گلوبل فنانشل انٹیگریٹی  (Global Financial Integrity) کے بانی اور صدر ہیں، جو کہ غیر قانونی مالی بہاؤ کو کم کرنے پر کام کرتے ہیں۔  ریمنڈ ڈبلیو بیکر نےاس کتاب میں معیشت کے معیار زندگی کو فروغ دینے اور بین الاقوامی معاشی حالتوں کو ختم کرنے کے لئے سرمایہ دارانہ نظام کے پھیلاؤ کو واضح طور پر بیان کیا ہے۔ "گندا پیسہ اور آزاد بازار کے نظام کی تجدید کا طریقہ"  ( Dirty Money and How to Renew the Free-Market System ) اعلی پاکستانی خاندانوں ، سیاسی رہنماؤں اور آرمی جنرلوں کے منی لانڈرنگ اسکینڈلز کی ایک مستند کہانی۔ یہ کتاب مغربی حکومتو

شکوہ ‏، ‏جواب ‏شکوہ ‏، ‏علامہ ‏اقبال ‏

Image
 ”شکوہ“ اقبال کے دل کی آواز ہے اس کا موثر ہونا یقینی تھا۔ اس سے اہل دل مسلمان تڑپ اُٹھے اور انہوں نے سوچنا شروع کیا کہ مسلمانوں کے حوصلہ شکن زوال کے اسباب کیا ہیں۔ آخر اللہ کے وہ بندے جن کی ضرب شمشیر اور نعرہ تکبیر سے بڑے بڑے قہار و جبار سلاطین کے دل لرز جاتے تھے کیوں اس ذلت و رسوائی کا شکار ہوئے؟ Rise and Fall of Nations – Law of Quran >>> ........<<< قرآن کا قانون عروج و زوال اقوام علامہ اقبال نے ”شکوہ میں ایسا انداز اختیار کیا ہے جس میں مسلمانوں کے عظیم الشان، حوصلہ افزا اور زندہ جاوید کارنامے پیش کیے گئے۔ لہٰذا اس نظم کے پڑھنے سے حوصلہ بلند ہوتا ہے قوت عمل میں تازگی آتی ہے۔ جو ش و ہمت کو تقویت پہنچتی ہے۔ عظیم الشان کارنامے اس حسن ترتیب سے جمع کر دیے گئے ہیں کہ موجودہ پست حالی کی بجائے صرف عظمت و برتری ہی سامنے رہتی ہے۔ گویا یہ شکوہ بھی ہے اور ساتھ ہی بہترین دعوت عمل بھی۔ اس لحاظ سے اردو زبان میں یہ اپنی نوعیت کی بالکل یگانہ نظم ہے۔ بقول تاثیر”شکوہ لکھا گیا تو اس انداز پر سینکڑوں نظمیں لکھی گئیں ملائوں نے تکفیر کے فتوے لگائے اور شاعروں نے شکوہ کے جواب لکھے لیکن شکو